ترسیلات

دسمبر 2021 میں کارکنوں کی 2.5 ارب ڈالر ترسیلات پاکستان آئیں

کراچی(گلف آن لائن) دسمبر 2021 میں کارکنوں کی 2.5 ارب ڈالر ترسیلات پاکستان آئیں ، انہوں نے ہر ماہ 2 ارب ڈالر سے زائد رہنے کا سلسلہ جون 2020 سے اب تک جاری رکھا ہوا ہے۔ اضافے کے لحاظ سے ترسیلات دسمبر 2021 میں 2.5 فیصد (ماہ بہ ماہ)اور 3.4 فیصد (سال بسال) بڑھ گئیں ۔ مالی سال 22 کی پہلی ششماہی میں مجموعی طور پر 15.8 ارب ڈالر کی ترسیلات وطن آئیں جو گذشتہ سال کی اسی مدت کے مقابلے میں 11.3 فیصد زائد ہیں۔ دسمبر 2021 میں کارکنوں کی زیادہ تر رقوم سعودی عرب (626.6ملین ڈالر)، متحدہ عرب امارات (453.2ملین ڈالر)، برطانیہ (340.8ملین ڈالر)اور امریکہ (248.5ملین ڈالر)سے آئیں۔

گذشتہ سال سے اب تک کارکنوں کی ترسیلاتِ زر کی مستحکم آمد میں جو عوامل مددگار رہے ہیں ان میں باضابطہ ذرائع سے رقوم بھجوانے کی حوصلہ افزائی کی خاطر حکومت اور اسٹیٹ بینک کے فعال پالیسی اقدامات، اور وبا کے دوران بہبودی رقوم کی پاکستان کو منتقلی شامل ہیں۔ کارکنوں کی ترسیلات کے جولائی تا نومبر مالی سال 22 کے ڈیٹا کو نظرِ ثانی کے بعد بڑھا دیا گیا ہے جس سے روشن ڈیجیٹل اکاونٹس (آر ڈی اے)میں مقامی استعمال (جیسے یوٹیلیٹی بلوں کی ادائیگی، پاکستانی روپے میں مقامی اکاونٹ کومنتقلی، وغیرہ) کے لیے رقوم کی آمد کا پتہ چلتا ہے۔ چونکہ اس منتقلی کا ڈیٹا بلحاظ ملک پہلے دستیاب نہ تھا اس لیے اسے توازنِ ادائیگی کے اعدادوشمار میں دیگر نجی منتقلی کے تحت درج کیا جاتا تھا۔ دسمبر 2021 کا ڈیٹا بھی اسی طرح مرتب کیا گیا ہے، اور اس طریقہ کار کو مستقبل میں بھی جاری رکھا جائے گا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں