شاہد خاقان عباسی

عمران خان نے آئین توڑا، صدر بھی ملوث، سب نے ملکر سازش رچائی،شاہد خاقان عباسی

اسلام آ باد (گلف آن لائن ) پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما شاہدخاقان عباسی نے کہا ہے کہ عمران خان نے آئین توڑا، صدر بھی اس میں ملوث ہیں، ان سب لوگوں نے مل کر سازش رچائی، الیکشن ثانوی حیثیت رکھتے ہیں آج نہ ہوئے تو کل ہو جائیں گے، عوام کی نظریں سپریم کورٹ کی طرف لگی ہیں، عوام منتظر ہیں کہ کیا سپریم کورٹ آئین کا دفاع کرے گی ؟

آج ملک کی سیاسی، قانونی و آئینی تاریخ کا فیصلہ ہے، آج عمران خان کی کرپشن کی کہانیاں سامنے آ رہی ہیں، کرپشن کی کہانیاں سامنے آنے سے بچنے کیلئے اس شخص نے آئین توڑا، ملک اس طرح نہیں چلا کرتے، بدنصیبی ہے آج ایسے لوگ ملک پر حکمران ہیں، پنجاب میں جو کرپشن ہوئی کوئی تصور بھی نہیں کرسکتا، آئین توڑنے والے پر آرٹیکل 6 لگتا ہے۔

منگل کو شاہد خاقان عباسی نے اسلام آباد کی احتساب عدالت کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ احتساب کا نام نہادعمل پچھلے 4 سال سے جاری ہے۔ انھوں نے کہا کہ اتوار کو ملک میں آئین کوچوری کرنے کی کوشش کی گئی اور وزیراعظم،اسپیکر،ڈپٹی اسپیکراور وفاقی وزرا منظم سازش کےذریعے آئین توڑنے کے مرتکب ہوئے۔ شاہد خاقان نے کہا کہ عوام کی نظریں اب سپریم کورٹ کی طرف لگی ہوئی ہیں،ماضی میں ایسے فیصلے ہوئے جن کولوگوں نے قبول نہیں کیا تاہم یہ ملک کی سیاسی و قانونی تاریخ کا فیصلہ ہے اورپاکستان کی تاریخ کا اہم ترین کیس ہے۔

لیگی رہنما نے کہا کہ ماضی میں آئین توڑنے والے آمر ہوا کرتےتھے لیکن اس بارآئین کوتوڑنے والے عوام کے نمائندوں میں سے ہیں۔ انھوں نےسوال اٹھایا کہ ملک میں جمہوری عمل صرف عمران خان کی کرپشن چھپانےکےلیےتوڑا گیا اورآئین توڑنے والوں کو وہ سزا دیں تاکہ آئندہ کوئی آئین کو کاغذ کا ٹکڑا سمجھ کرنہ توڑے۔ شاہد خاقان کا کہنا تھا کہ انتخابات آج نہ ہوئے تو کل ہوجائیں گے لیکن عدم اعتماد پرووٹنگ کی بات آئین کرتا ہے۔

انھوں نےخدشہ ظاہر کیا کہ پنجاب میں بھی کوشش ہوگی کہ ووٹنگ نہ ہو اورشکست سے بچنے کے لیے حکمران آئین بھی توڑنے پر آمادہ ہوں گے۔ انھوں نے یہ بھی کہا کہ آرٹیکل 6 لگنا چاہیے تا کہ حکمران جواب دہ ہوں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں