چوہدری شجاعت حسین

عام انتخابات جلد نظر نہیں آرہے،عمران خان کو مشورے کی ضرورت نہیں ، چوہدری شجاعت حسین

لاہور(نمائندہ خصوصی) مسلم لیگ (ق) کے صدر و سابق وزیر اعظم چوہدری شجاعت حسین نے کہا ہے کہ میرا پی ڈی ایم سے نہیں بلکہ آصف زرداری اور شہبازشریف سے رابطہ ہے،

پیر کے روزمیڈیا سے گفتگو میں انہوں نے کہا کہ تین سے چار روز تک سیاسی رابطے اور ملاقاتیں جاری رہیں گی،مجھے عام انتخابات جلد نظر نہیں آرہے،عمران خان عقلمند آدمی ہیں انہیں مشورے کی ضرورت نہیں ہے، پنجاب کے معاملے پرزیادہ ٹینشن ہے ، جلد حل نکل آئے گا،چوہدری شجاعت حسین نے کہا کہ کچھ لوگ اسمبلیاں توڑنے اور کچھ بچانے پرتلے ہیں،عمران خان عقلمند آدمی ہیں انہیں مشورے کی ضرورت نہیں ہے، چوہدری شجاعت نے کہا کہ پرویزالہی چار پانچ ماہ نکال سکتے ہیں، مستقبل کا سیاسی لائحہ عمل مل بیٹھ کر طے کریں گے پنجاب میں اچھا ہی ہونے جا رہا ہے، پی پی اور ن لیگ عدم اعتماد یا اعتماد کے ووٹ دونوں آپشن پر غور کررہے ہیں،

انہوں نے کہا کہ پی پی ن لیگ کے پاس اور بھی آپشن ہوں گے مجھے دونوں جماعتوں نے دو ہی آپشن بتائے ہیں، جن کے پاس عدم اعتماد کے ووٹ پورے نہیں وہ اپنا نمبر پورا کریں گے،جس کے پاس ووٹ پورے ہوئے وہ بچ جائے گا،ان کا کہنا تھا کہ آنے والے دنوں میں چیزیں ٹھیک ہو جائیں گے،چوہدری شجاعت کا کہنا تھا کہ پرویزالہی کے لیے گنجائش کا مسئلہ نہیں مسئلہ تو سیاسی جماعتوں کا ہے، ایک عدم اعتماد اور دوسری اعتماد کے ووٹ کی تحریک لانا چاہتی ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں