احسن اقبال

ہماری 3، 4سال کی کاوشوں کے بعد دہشتگردی نے شکست کھائی ، احسن اقبال

اسلام آباد (نمائندہ خصوصی ) وفاقی وزیر منصوبہ بندی وترقی احسن اقبال نے کہا کہ آج پاکستان 75ویں آزاد ی کی سالگرہ منارہا ہے ، 2013میں اقتدار میں آئے تو ملک ایسے ہی حالات سے گزررہا تھا ، ملک میں 18گھنٹے لوڈشیدنگ کا سامنا تھا ۔

روزانہ خودکش حملہ آور بمباری کرتا تھا، روزگار کیلئے شہر میں کام پر جانے والے افراد کے لواحقین ان کیلئے دعا گورہتے تھے ۔بدھ کے روز اسلام آباد میں تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوںنے کہا ہماری 3، 4سال کی کاوشوں کے بعد دہشتگردی نے شکست کھائی ، 67سالوں میں 18ہزار میگا واٹ بجلی کے منصوبے لگائے گئے وہاں چار سالون میں 11ہزار میگا واٹ بجلی کے منصوبے لگائے گئے ، ہم نے بجلی لوڈشیڈنگ کو شکست دی ، سی پیک کے نتیجے میں اربوں ڈالر کی سرمایہ کاری ہوئی ، 2013میں دہشتگرد کہلایا جانے والا ملک 2018میں چینی اربوں ڈالر کی سرمایہ کاری والا ملک تھا ،ہم نے ملک میں سی پیک منصوبے کا آغاز کیا ، ساری دنیا پاکستان میں سی پیک کے تحت سرمایہ کاری کرنے کو تیار تھی ۔ ہم نے اپنے دور میں ٹیکس کولیکشن کو بڑھایا ، احسن اقبال نے کہا کہ 2013میں ہم نے وژن 2020بنایا ، 2013 میں پاکستان کا ترقیاتی بجٹ 1340ارب روپے تھا ۔ 2018میں تریقاتی بجٹ ایک ہزار ارب تک پہنچ چکا تھا ۔

یکم اپریل کو وزارت خزانہ نے اعلامیہ جاری کیا تھا کہ ترقیاتی بجٹ کیلئے ایک روپیہ بھی جاری نہیں کرسکتے ۔ پالیسیاں کم از کم 10سال کا تسلسل چاہتی ہیں۔ 21ویں صدی معاشی ہے ، دنیا معیشت کے میدان میں مقابلہ کررہی ہے ، معاشی ترقی کیلئے فی کس آمدنی میں اضافہ کرنا ہوگا ، آج ہم یہ سوچتے ہیں کہ کونسا منصوبہ بند یا سست ہے ، ہمیں سیاست سے بالا تر ہوکر معشیت پر توجہ دینا ہوگی ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں