سندھ ہائیکورٹ

سندھ ہائیکورٹ میں دودھ کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف نئی درخواست مسترد

کراچی(گلف آن لائن)سندھ ہائیکورٹ نے دودھ کی قیمتوں میں اضافے کے خلاف نئی درخواست مسترد کردی ہے۔جمعہ کو سندھ ہائیکورٹ میں دودھ کی قیمت سے متعلق درخواست کی سماعت ہوئی۔

عدالت نے ریمارکس دیئے کہ دودھ کی قیمتوں میں اضافے کا نیا حکم جاری کریں تو وہ دودھ میں 4 کی جگہ 6 لیٹر پانی ملانا شروع کردیں گے۔ قیمتوں میں مزید اضافہ کیا گیا ہے تو کمشنرسے رجوع کیا جائے، کمشنرعمل درآمد نہیں کراتے تو توہین عدالت کی درخواست دائرکریں۔عدالت نے واضح کیا کہ ہم چاہتے ہیں کہ قیمتوں کا تعین میکنزم کے تحت ہو اور کمشنر کراچی کو قیمتوں کے تعین کیلئے مکینزم بنانے کا حکم دے چکے ہیں۔

عدالت نے بتایا کہ سال 2018میں دودھ کی قیمت94 روپے فی لیٹر مقرر کی گئی تھی تاہم اب ہر چیز مہنگی ہوچکی ہے۔درخواست گزار نے عدالت کو بتایا کہ دودھ فروشوں نے فی لیٹر10 روپے مزید اضافہ کردیا ہے۔ اس وقت کراچی میں140روپے فی لیٹر دودھ فروخت ہورہا ہے اور جب دل چاہتا ہے دودھ فروش قیمتوں میں اضافہ کردیتے ہیں۔
٭

اپنا تبصرہ بھیجیں